سیرت نبویﷺ

رخِ مصطفی ہے وہ آئینہ

ربیع الاول اسلامی سال کا تیسرا مہینہ ہے ؛جو برکتوں کے نزول،سعادتوں کے حصول اور رحمتوں کےہجوم کا خاص مہینہ کہلاتا ہے۔ اس مہینہ میں نبی آخرالزماں حضرت محمد صلی الله علیہ وسلم کی ولادت باسعادت ہوئی،اسی ماہ  آپ صلی الله علیہ وسلم کو چالیس سال کی عمر میں نبوت سے سرفرازکیاگیا اور پھر اسی ماہ63/سال کی عمر میں آ پ صلی الله علیہ وسلم کا وصال ہوا۔

مزید پڑھیں >>

رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کے متعدد نکاح کی حکمتیں

حضور ﷺ کا کوئی رشتہ ازدواج بھی محض نکاح کی خاطر نہ تھا بلکہ اس میں بہت سی حکمتیں پوشیدہ تھیں ۔ ۔ کوئی ایک نکاح ایسانہیں جس نے اسلامی انقلاب کے لئے راستہ ہموار کر نے میں کوئی مددنہ دی ہو۔ اس لیے بے شمار دینی، تعلیمی اور دیگر مصلحتوں اور حکمتوں کی بنیاد پر اللہ تبارک و تعالیٰ کی جانب سے بھی یہ اجازت خاص آپ صلی اللہ علیہ وسلم کے لئے ہی تھی۔

مزید پڑھیں >>

اللہ کے رسولؐ کی دعائیں (قسط اول)

عربی زبان میں دعا کا لفظ اور پکار کے معنی میں آتا ہے۔ دعا یدعوا کا مصدر ہے۔ یوں تو دعا اور ندا ہم معنی ہیں ، مگر ندا کبھی بغیر نام لئے بھی یا اور ایا کے ساتھ ہوتی ہے اور دعا میں نام لیا جاتا ہے۔ جیسے فلاں اور کبھی دعا کا استعمال ندا کی جگہ اور ندا کا استعمال دعا کی جگہ بھی ہوتا ہے۔

مزید پڑھیں >>

مزاح میں آں حضرتﷺ کا اسوہ

اللہ تعالیٰ نے انسا ن کی فطرت میں متضادصفتیں ودیعت کی ہیں ؛ چنانچہ کبھی اس کے مزاج میں درشتی ہوتی ہے توکبھی نرمی، کبھی وہ غصہ سے بے قابوہوجاتاہے توکبھی خوشی کے نقوش اس کے چہرے پرہویداہوتے ہیں ، کبھی اس کی طبیعت آب وہواکی گرمی کوپسندکرتی ہے توکبھی وہ فضامیں خُنکی کاخواہاں ہوتاہے، کبھی اس کا مزاج موسمِ باراں کے خلاف ہوتاہے اورکبھی وہ قطرۂ آب کے لئے گڑگڑاتاہے۔

مزید پڑھیں >>

حضورﷺ کی عائلی زندگی پر ایک نظر

ازواجِ نبی صلی اللہ علیہ وسلم کے معلّمات ہونے کے رول کو آسان بنانے کیلئے رب کائنات نے ان کو امہات المومنین یعنی اہل ایمان کی ماؤں کا منصب عطا کیا۔ گویا ہر صاحب ایمان آدمی مسائل دریافت کرنے کیلئے ان تک اسی طرح رسائی حاصل کرسکتا تھا جس طرح ایک بیٹا اپنی ماں تک رسائی رکھتا ہے۔

مزید پڑھیں >>

رسول اللہ ﷺ بحیثیت شوہر

 آج ہم دنیاوی معاملات میں اپنی بیویوں کی فکرتوبہت زیادہ کرتے ہیں ؛ لیکن دین کے باب یاتوفکرہی نہیں کرتے یاتساہل پسندی سے کام لیتے ہیں ؛ حالاں کہ یہی آخرت کے سفرمیں کام آنے والا توشہ اورزادِراہ ہے۔آپ ا کے اسوہ سے ہمیں عبادت کے باب میں اپنی بیویوں کے رعایت کرنے کاسبق حاصل کرناچاہئے اوراس باب میں دنیاوی توجہات سے کہیں زیادہ فکرکرنی چاہئے۔

مزید پڑھیں >>

خانہ کعبہ اور مقامِ ابراہیمؑ

 اِس وقت میرے محبوب ﷺکا ذکر ہو رہاہے سرور کائنات ﷺ کی روح پرنور کا ذکر ہو رہاہے اُس ہستی کا ذکر جس کا انتظار ہزاروں سالوں سے ہر ذی روح کو ہے اِس وقت کا ئنات کا ذرہ ذرہ معطر اور خو شی سے جھوم رہا ہے قدرت خدا وندی ہے اُسی لمحے وہ پتھر بھی سرکار دوجہاں ﷺ  کے ذکر سے موم ہو گیا او ر حضرت ابرا ہیم ؑ کے پا ئوں کے نشان قیامت تک کے لیے پتھر میں پیوست ہو گئے

مزید پڑھیں >>

وفات النبیﷺ

پھر اٹھنا چاہا لیکن اٹھ نہ پائے تو حضرت علی ابن ابی طالب اور حضرت فضل بن عباس رضی اللہ تعالٰی عنہما آگے بڑھے اور نبی علیہ الصلوة والسلام کو سہارے سے اٹھا کر سیدہ میمونہ رضی اللہ تعالٰی عنہا کے حجرے سے سیدہ عائشہ رضی اللہ تعالٰی عنہا کے حجرے کی طرف لے جانے لگے۔

مزید پڑھیں >>

ضعیفوں کے ساتھ آپ ﷺ کا طرزِ عمل

یقینا وہ ہمارے قدر واحترام اور جذبۂ ترحم وعاطفت کے مستحق ہیں ؛ چونکہ ہر انسان کو زندگی کے اس مرحلہ سے گذرنا ہے، حدیث کے بموجب ہمارے بڑوں اور معمرین کے ساتھ ہمارا جو رویہ ہوگا وہی سلوک ہماری اولادیں اور نسلیں ہمارے ساتھ کریں گی۔ اس تعلق آپ ﷺ کا رویہ اورسلوک بھی ہمارا لئے نمونہ، ہماری یہ صورتحال ہے کہ بڑے بوڑھوں کی کیا قدر کرتے، ہم سے تو اپنے ماں باپ کی بھی قدر کرنا نہیں ہوتا۔

مزید پڑھیں >>

النبی الخاتم: ایک مطالعہ

ہ کتاب سیرت نبوی پر نہایت اچھوتی اور نرالی کتاب ہے، جہاں یہ سیرت نبوی کے واقعات اور اس سے حاصل ہونے والے عبرتوں اور موعظتوں کا ذکر کرتی ہے، وہیں اس کی سب سے بڑی خصوصیت یہ ہے کہ یہ کتاب نبوت محمدی کے بتدریج ارتقاء اور ’’إن مع العسر یسرا‘‘ کی مصداق ہے، کہ مصائب ومتاعب کی بھٹیوں میں جل کر انسان صاف وشفاف ہوجاتا ہے، زبان اور الفاظ کی بندش اور پیرایہ بیان اس قدر گہرا وگیرا اور اردو زبان کی لذت وشاشنی کو لئے ہوئے کہ قاری کتاب کو پڑھتا جائے او ر سر دھنتا جائے۔  

مزید پڑھیں >>