ادبغزل

دشت دل میں  اب ہلچل مچا ہے 

جنون وعشق کی یہی اب سزا ہے

حبیب بدر

دشت دل میں  اب ہلچل مچا ہے
جنون وعشق کی یہی اب سزا ہے

نہ جائیں آپ وادی جنوں کی طرف
لئے ہاتھ میں خنجر ستمگر کھڑا ہے

توڑ کے آزمائیں اب ساغر محبت
یہ حوصلہ لئے اب بدر بھی چلا ہے

نگاہیں جھکے گی نہ پیاس ہی بجھےگی
اسیر جنوں کی یہی اب سزا ہے

مزید دکھائیں

حبیب بدر ندوی

ایم اے شعبہ عربی جواہر لال نہرو یونیورسٹی دہلی.

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

متعلقہ

Close