دل و نظر سے ترا انتظار کرتا ہوں

0

ڈاکٹر محسن عتیق خان محسنؔ

دل و نظر سے ترا انتظار کرتا ہوں

تجھے ائے جان وفا کب سے پیار کرتا ہوں

وہ  رات وصل کی بیتی وفا کی باتوں میں

میں ویسی شب کی تمنا ہزار کرتا ہوں

غریب جان کے تم نے ستم بہت ڈھائے

چمن میں بیٹھ کے آنسو شمار کرتا ہوں

ملا ہے مجھ کو محبت میں یاد کا تحفہ

تمہارے ہجر میں محسنؔ اشعار کہتا ہوں

تبصرے