ادبغزل

یہ کیسے فلسفی کا خلاصہ ہے زندگی

احمد نثارؔ

در در بھٹکنے والوں کا صحرا ہے زندگی

جیسے کسی فقیر کا کاسہ ہے زندگی

دنیا کی اس ہجوم میں تنہا ہے زندگی

گلشن میں ایک گْل کی تمنا ہے زندگی

دیکھیں تو لگ رہی ہے کہ قطرہ ہے زندگی

سوچیں تو کائنات کا دریا ہے زندگی

جذباتِ زندگی ہی کا جذبہ ہے زندگی

یہ کیسے فلسفی کا خلاصہ ہے زندگی

کھوئیں تو زندگی کا دلاسہ ہے زندگی

پائیں تو زندگی ہی کا منشہ ہے زندگی

چْپ ہیں تو سادہ سادہ سا پرچہ ہے زندگی

بولیں تو کہکشانوں کا نقشہ ہے زندگی

جس کو نثارؔ آپ نے سمجھا ہے زندگی

کتنا حسیں فریب و تماشہ ہے زندگی

مزید دکھائیں

احمد نثار

نام سید نثار احمد، قلمی نام احمد نثار۔ جائے پیدائش شہر مدنپلی ضلع چتور آندھرا پردیش۔ درس و تدریس سے رضاکار موظف۔ اردو ادب، شاعری، تحقیق، ٹرائننگ اہم دلچسپیاں۔ انگریزی، ہندی تیلگو اور اردو زبانوں میں مہارت۔ کمیونکیشن اسکلز ایکسپرٹ۔ شعری مجموعہ روحِ کائنات، کہکشانِ عقیدت (نعتیہ مجموعہ) سکوتِ شام (زیرِ ترتیب)، تصنیف مواصلاتی مہارات برائے بی یو یم یس طلباء (Communication Skills for BUMS Students) ۔ ویکی پیڈین و ویکی میڈین۔ فی الحال رہائش پونے/ممبئی، مہاراشٹر۔

متعلقہ

Back to top button
Close