غزل

آنکھوں کو اک خواب دکھایا جا سکتا ہے

قصہ یوسف کا دہرایا جا سکتا ہے

نادیہ عنبر لودھی

آنکھوں کو اک خواب دکھایا جا سکتا ہے

قصہ یوسف کا دہرایا جا سکتا ہے

ہا ں !  اس دنیا کو ٹھکرایا جا سکتا ہے

حسن اور عشق  دعا سے پایا جا سکتا ہے

جو مجھ میں ہو زلیخا تجھ میں یوسف کوئی

عمروں کا سرمایہ لایا جا سکتا ہے

اسُ کو کہنا مری آنکھوں کے کا سے میں

دید کا اک سکہ تو دکھایا جا سکتا ہے

ناداں اتنا مت سمجھو تم دل کو عنبر

کب یاد وں سے اسے بہلایا جا سکتا ہے

مزید دکھائیں

نادیہ عنبر لودھی

نادیہ عنبر لودھی شاعری اور نثر کی جاندار آواز ہیں۔ آپ برطانیہ کے اردو اخبارات سے شہرت حاصل کرنے والی پاکستانی لکھاری ہیں۔ جنہیں ادبی ایوارڈ 2017 سے بر طانیہ میں نوازا گیا۔ جو بچوں اور خواتین کے مسائل پہ لکھتی ہیں۔‬آپ خواتین اور بچوں کی بے بسی پہ قلم اٹھاتی ہیں۔

متعلقہ

Close