نعت بحضور سرورِ کائنات فخرِ موجودات احمد مجتبیٰ حضرت محمد مصطفٰی ﷺ

ڈاکٹر احمد علی برقیؔ اعظمی

’’ اے خاصۂ خاصانِ رسل ‘‘ شاہِ مدینہ

طوفانِ حوادث میں ہے اُمّت کا سفینہ

اِس دورِ پُر آشوب میں اب جائیں کہاں ہم

ہم بھول گئے ایسے میں جینے کا قرینہ

کچھ کہنے سے قاصر ہے زباں ذہن ہے ماؤف

اب بامِ ترقی کا بھی مسدود ہے زینہ

درکار ہمیں آپ کی ہے چشمِ عنایت

آنکھوں میں نمی اور ہے چہرے پہ پسینہ

وہ آپ ہیں جس سے ملا قرآن کا تحفہ

جو نوعِ بشر کی ہے ہدایت کا خزینہ

واللیل اذا یغشٰی کی خوشبو سے معطّر

ہے آپ کی پیشانیٔ اقدس کا پسینہ

بیشک ہے دو عالم کے لئے مطلعِ انوار

یہ آپ کی انگُشتِ شہادت کا نگینہ

احمد علی برقیؔ کی ہے یہ شامتِ اعمال

ہے فضل خدا آپ کی بعثت کا مہینہ



⋆ احمد علی برقی اعظمی

احمد علی برقی اعظمی

ڈاکٹر احمد علی برقیؔ اعظمی اعظم گڑھ کے ایک ادبی خانوادے سے تعلق رکھتے ہیں۔ آپ کے والد ماجد جناب رحمت الہی برقؔ دبستان داغ دہلوی سے وابستہ تھے اور ایک باکمال استاد شاعر تھے۔ برقیؔ اعظمی ان دنوں آل آنڈیا ریڈیو میں شعبہ فارسی کے عہدے سے سبکدوش ہونے کے بعد اب بھی عارضی طور سے اسی شعبے سے وابستہ ہیں۔۔ فی البدیہہ اور موضوعاتی شاعری میں آپ کو ملکہ حاصل ہے۔ آپ کی خاص دل چسپیاں جدید سائنس اور ٹکنالوجی خصوصاً اردو کی ویب سائٹس میں ہے۔ اردو و فارسی میں یکساں قدرت رکھتے ہیں۔ روحِ سخن آپ کا پہلا مجموعہ کلام ہے۔

آپ اسے بھی پسند کر سکتے ہیں

یہ جھانکی ہے آکاش وانی کی شان

یہ ہے جشنِ جمہوریت کا نشان یہ جھانکی ہے آکاش وانی کی شان

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے