ادب

دارالمصنفین شبلی اکیڈمی میں ’سرسید کی عصری معنویت‘ پر دوروزہ سمینار(2)

پروفیسر ظلی نے مدرسۃ العلوم کو امید کی ایک کرن قرار دیا اور کہا کہ سرسیدکا زمانہ اس سے بھی زیادہ خراب تھا مگر انھوں نے قوم کو دوبارہ جینے اوروقار کے ساتھ جینے کا حوصلہ دیا۔ اس سمینار کے دوران مقالوں کے چار اجلاس منعقد ہوئے۔ پروفیسر صغیر افراہیم، ڈاکٹر شمس بدایونی،پروفیسر سعود عالم قاسمی نے مختلف اجلاس کی صدارت فرمائی اور جناب اشہد جمال، ڈاکٹر جمشید ندوی اور ڈاکٹر خان احمد فاروق نے نظامت کا فریضہ انجام دیا۔

مزید پڑھیں >>

دارالمصنفین شبلی اکیڈمی میں ’سرسید کی عصری معنویت‘ پر دوروزہ سمینار

افتتاحی اجلاس میں پروفیسر اصغر عباس کی مرتبہ کتاب ’’شذرات سرسید ‘‘جسے کہ شبلی اکیڈمی نے شائع کیا ہے، اجرا ہوااور ڈاکٹر محمد طاہر (شعبہ اردو شبلی پی جی کالج )کی مرتبہ کتاب ’علی گڑھ انسٹی ٹیوٹ گزٹ کاتوضیحی اشاریہ (۱۸۸۱۔۱۸۸۵)کا اجرا کیاگیا۔ اکیڈمی کی مطبوعات کی آن لائن خریداری اور مطالعہ کے لیے ای بک لانچنگ کی گئی۔ اس موقع پر جناب افضال عثمانی،عاکف عبدالرحمن، مرزا ہمدان بیگ اور حافظ قمر عباسی کا خصوصی طور پر شکریہ ادا کیا گیا جنھوں نے اس بڑے کام کو اپنی کوششوں سے آسان بنادیا۔

مزید پڑھیں >>

ویمنس ڈگری کالج نلگنڈہ میں قومی اردو سمینار

سوشل میڈیا سے اردو رسم الخط کا فروغ ہورہا ہے۔ گری راج کالج شعبہ اردو کے جانب سے ’’فون میں اردو گھر گھر میں اردو‘‘ مہم کو عالمی سطح پر مقبولیت حاصل ہوئی ہے۔ طلبا کو پابند کیا جائے کہ وہ اردو میں ہی پیغامات لکھا کریں ۔ طلبا کی تخلیقی صلاحیتوں کو ابھارنے کے لئے ان کی تحریر کو اردو بلاگ پر پیش کیا جائے۔ یوٹیوب پر مختلف شعرا اور ادیبوں سے متعلق ویڈیوز ہیں جنہیں طلبا کو دکھایا جائے ۔

مزید پڑھیں >>