نظم

آج ہے انفارمیشن ٹکنولوجی کی بہار

کوئی ’گوگل‘ پر فدا ہے کوئی ’یاہو‘ پر نثار

احمد علی برقی اعظمی

آج ہے انفارمیشن ٹکنولوجی کی بہار
کوئی ’گوگل‘ پر فدا ہے کوئی ’یاہو‘ پر نثار

کوئی وکیپیڈیا پر کررہا ہے جستجو
کررہا ہے کوئی سوشل میڈیا پر اعتبار

ہے ’بلاگ اسپاٹ‘ کا گرویدہ کوئی اور کوئی
کر رہا ہے دوسری ویب سائٹوں پر انحصار

’انڈیا ٹائمز‘ ہو ’جی میل‘ ہو یا ’ہاٹ میل‘
چل رہا ہے ’آئی ٹی‘ سے آج سب کا کاروبار

آج ہے سائنس پر ہر چیز کا دار و مدار
اب نئی قدروں پہ ہے اہل جہاں کا اعتبار

اب نہیں کچھ فرق قرب و بعد میں ’ای میل‘ سے
لوگ آخر کیوں کریں اب نامہ بر کا انتظار

زندگی کا کوئی بھی شعبہ نہیں اس سے الگ
آج ’کمپیوٹر‘ پہ ہے سارے جہاں کا انحصار

ہو فضائی ٹکنولوجی یا نظام کائنات
کرتے ہیں معلوم اس سے گردش لیل و نہار

جانتے ہیں لوگ اس سے کیا ہے موسم کا مزاج
کیوں فضا میں اڑ رہے ہیں ہر طرف گرد و غبار

اس کا ہے مرہون منت آج سارا ’میڈیا‘
جتنے سیٹ لائٹ ہیں سب کا ہے اسی پر انحصار

ہے سبھی سیٹ لائٹوں کا اس سے پیہم رابطہ
’ورلڈ وائڈ ویب‘ سے ہے یہ ہر کسی پر آشکار

عصر حاضر میں نہیں اس سے کسی کو ہے مفر
پڑتی ہے اس کی ضرورت ہر کسی کو بار بار

’آئی ٹی‘ کو آپ بھی اپنائیں برقی اعظمی
آج ہے اس کے لئے ماحول بیحد سازگار

مزید دکھائیں

احمد علی برقی اعظمی

ڈاکٹر احمد علی برقیؔ اعظمی اعظم گڑھ کے ایک ادبی خانوادے سے تعلق رکھتے ہیں۔ آپ کے والد ماجد جناب رحمت الہی برقؔ دبستان داغ دہلوی سے وابستہ تھے اور ایک باکمال استاد شاعر تھے۔ برقیؔ اعظمی ان دنوں آل آنڈیا ریڈیو میں شعبہ فارسی کے عہدے سے سبکدوش ہونے کے بعد اب بھی عارضی طور سے اسی شعبے سے وابستہ ہیں۔۔ فی البدیہہ اور موضوعاتی شاعری میں آپ کو ملکہ حاصل ہے۔ آپ کی خاص دل چسپیاں جدید سائنس اور ٹکنالوجی خصوصاً اردو کی ویب سائٹس میں ہے۔ اردو و فارسی میں یکساں قدرت رکھتے ہیں۔ روحِ سخن آپ کا پہلا مجموعہ کلام ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

متعلقہ

Close