نظم

بیاد لیاقت علی عاصم مرحوم

مرجع اہل نظر ہیں جن کے ادبی شاہکار 

ڈاکٹر احمد علی برقی اعظمی

آج ہیں عاصم کے غم میں اہل اردو سوگوار

مرجع اہل نظر ہیں جن کے ادبی شاہکار

خوں کے آنسو رورہا ہے خطہ بر صغیر

اٹھ گیا دنیا سے اقلیم سخن کا تاجدار

دیتا ہے اس کی شہادت آج سوشل میڈیا

ان کے تھے مداح اقصائے جہاں میں بے شمار

جملہ ارباب نظر اس بات پر ہیں متفق

تھے وہ بحر شاعری کی ایک در شاہوار

مٹ نہیں سکتے کبھی ان کے نقوش جاوداں

جن کو حاصل ہے جہان فکروفن میں اعتبار

جنت الفردوس میں درجات ہوں ان کے بلند

ان پہ نازل ہو وہاں پر رحمت پروردگار

صرف برقی اعظمی ہی ان کا گرویدہ نھا

تھی عروس فکرو فن ان کے تغزل پر نثار

مزید دکھائیں

احمد علی برقی اعظمی

ڈاکٹر احمد علی برقیؔ اعظمی اعظم گڑھ کے ایک ادبی خانوادے سے تعلق رکھتے ہیں۔ آپ کے والد ماجد جناب رحمت الہی برقؔ دبستان داغ دہلوی سے وابستہ تھے اور ایک باکمال استاد شاعر تھے۔ برقیؔ اعظمی ان دنوں آل آنڈیا ریڈیو میں شعبہ فارسی کے عہدے سے سبکدوش ہونے کے بعد اب بھی عارضی طور سے اسی شعبے سے وابستہ ہیں۔۔ فی البدیہہ اور موضوعاتی شاعری میں آپ کو ملکہ حاصل ہے۔ آپ کی خاص دل چسپیاں جدید سائنس اور ٹکنالوجی خصوصاً اردو کی ویب سائٹس میں ہے۔ اردو و فارسی میں یکساں قدرت رکھتے ہیں۔ روحِ سخن آپ کا پہلا مجموعہ کلام ہے۔

متعلقہ

Back to top button
Close