نظم

سعادت حجِ بیت اللہ کی سب کو مُیسّر ہو

تمنّائے دلی ہر شخص کی یہ بارآور ہو

ڈاکٹر احمد علی برقی اعظمی

تمنّائے دلی ہر شخص کی یہ بارآور ہو
سعادت حجِِّ بیت اللہ کی سب کو مُیَسّرہو

مبارک حاجیوں کو فضلِ حق سے حجِ اکبر ہو
زیارت خانۂ کعبہ کی اُن کو روح پرور ہو

خوشی سے جائیں حج کو اور خوشی سے لوٹ کرآئیں
ہمیشہ اُن کے سر پر ابرِ رحمت سایہ گُستر ہو

زیارت سے مُشرّف ہوں وہاں وہ حجرِاسود کی
زباں پر ہر کسی کی نعرۂ اللہ اکبر ہو

عمل پیرا ہوں سب احکام قرآن اور سُنّت پر
مُیسّر دولتِ عرفاں سبھی کو زندگی بھر ہو

ہو مُستحکم خدا کے فضل سے ملّت کا شیرازہ
سبھی ہوں ایک صف میں کوئی اکبر ہو نہ اصغر ہو

مدینے میں ہو سب کی دسترس میں بادۂ عرفاں
سبھی پر مہرباں یکساں وہاں ساقئ کوثر ہو

نظر کے سامنے ہو کاش میری گُنبدِ خضریٰ
مرا قلبِ حزیں بھی نورِ ایماں سے منوّر ہو

کہا ہے جس کے حق میں رب نے واللیلِ اِذا یغشیٰ
شمیمِ زُلف سے اُس کی مشامِ جاں مُعطّر ہو

ہوں خاطر خواہ سب سیراب برقیؔ آبِ زمزم سے
جو آئے لوٹ کر وہ زینتِ محراب و منبر ہو

مزید دکھائیں

احمد علی برقی اعظمی

ڈاکٹر احمد علی برقیؔ اعظمی اعظم گڑھ کے ایک ادبی خانوادے سے تعلق رکھتے ہیں۔ آپ کے والد ماجد جناب رحمت الہی برقؔ دبستان داغ دہلوی سے وابستہ تھے اور ایک باکمال استاد شاعر تھے۔ برقیؔ اعظمی ان دنوں آل آنڈیا ریڈیو میں شعبہ فارسی کے عہدے سے سبکدوش ہونے کے بعد اب بھی عارضی طور سے اسی شعبے سے وابستہ ہیں۔۔ فی البدیہہ اور موضوعاتی شاعری میں آپ کو ملکہ حاصل ہے۔ آپ کی خاص دل چسپیاں جدید سائنس اور ٹکنالوجی خصوصاً اردو کی ویب سائٹس میں ہے۔ اردو و فارسی میں یکساں قدرت رکھتے ہیں۔ روحِ سخن آپ کا پہلا مجموعہ کلام ہے۔

متعلقہ

Close