نظم

چھوڑئیے حضور ملاحضہ بے کار 

نزہت قاسمی

چھوڑئیے حضور ملا حضہ بے کار
دنیا میں مشہور اب دو ہی کاروبار
۔
گھو ٹالہ سرکار بنا میڈیا پہریدار
نشریات میں بس اقلیت پرہے وار
۔
پھوٹ ڈالیے اور چلائیے سرکار
برسوں برس کا یہ پرانا کاروبار
۔
غبن,بیان,دورے کہاں فرصتِ کار
عوام ہے بےکار کہاں اس کی پکار
۔
بیان بازیوں کی ہر طرف بھرمار
جھوٹ کبھی خوشامدیا غبارِ زہر
۔
اطلاعات ونشریات کے ٹھیکےدار
ہر شام سجائیں یہ محفل ذمہ دار
۔
باطل سے ڈرتےاور بنے انکےطرفدار
مجرم ہیں ان کےکٹہرے میں حقدار
۔
ظلم وجبر تشدد اور پیسے کی لہر
لپیٹ میں سب اس کی رہنماورہبر
۔
قائم رہیں ہمیشہ ایمان کے علمبردار
نزہت کی یہ اُمید پوری ہوگی سراسر

مزید دکھائیں

متعلقہ

Close