نظم

چھوڑئیے حضور ملاحضہ بے کار 

نزہت قاسمی

چھوڑئیے حضور ملا حضہ بے کار
دنیا میں مشہور اب دو ہی کاروبار
۔
گھو ٹالہ سرکار بنا میڈیا پہریدار
نشریات میں بس اقلیت پرہے وار
۔
پھوٹ ڈالیے اور چلائیے سرکار
برسوں برس کا یہ پرانا کاروبار
۔
غبن,بیان,دورے کہاں فرصتِ کار
عوام ہے بےکار کہاں اس کی پکار
۔
بیان بازیوں کی ہر طرف بھرمار
جھوٹ کبھی خوشامدیا غبارِ زہر
۔
اطلاعات ونشریات کے ٹھیکےدار
ہر شام سجائیں یہ محفل ذمہ دار
۔
باطل سے ڈرتےاور بنے انکےطرفدار
مجرم ہیں ان کےکٹہرے میں حقدار
۔
ظلم وجبر تشدد اور پیسے کی لہر
لپیٹ میں سب اس کی رہنماورہبر
۔
قائم رہیں ہمیشہ ایمان کے علمبردار
نزہت کی یہ اُمید پوری ہوگی سراسر

یہ مصنف کی ذاتی رائے ہے۔
(اس ویب سائٹ کے مضامین کوعام کرنے میں ہمارا تعاون کیجیے۔)
Disclaimer: The opinions expressed within this article/piece are personal views of the author; and do not reflect the views of the Mazameen.com. The Mazameen.com does not assume any responsibility or liability for the same.)


مزید دکھائیں

متعلقہ

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

اسے بھی ملاحظہ فرمائیں

Close
Close