نظم

یاد رفتگاں: بیادمسیح الملک حکیم اجمل خان

احمد علی برقی اعظمی

فخرِ دوراں حکیم اجمل خاں

علم و حکمت کی تھے جو روحِ رواں

ان کی حاذقؔ ہے یادگارِ عظیم

جس کی عظمت کا معترف ہے جہاں

علمِ طب میں تھے وہ مسیح الملک

کارنامے ہیں ان کے وِردِ زباں

ملک و ملت کے خیرخواہ تھے وہ

ایسے ہمدرد اب ملیں گے کہاں

گامزن تھے رہِ ترقی پر

جس میں حائل ہوا نہ سود و زیاں

کارآمد ہے ان کا درسِ عمل

روح پرور تھا ان کا عزمِ جواں

جامعہ ملیہ میں تھے سرگرم

ثبت برقیؔ جہاں ہیں ان کے نشاں

مزید دکھائیں

احمد علی برقی اعظمی

ڈاکٹر احمد علی برقیؔ اعظمی اعظم گڑھ کے ایک ادبی خانوادے سے تعلق رکھتے ہیں۔ آپ کے والد ماجد جناب رحمت الہی برقؔ دبستان داغ دہلوی سے وابستہ تھے اور ایک باکمال استاد شاعر تھے۔ برقیؔ اعظمی ان دنوں آل آنڈیا ریڈیو میں شعبہ فارسی کے عہدے سے سبکدوش ہونے کے بعد اب بھی عارضی طور سے اسی شعبے سے وابستہ ہیں۔۔ فی البدیہہ اور موضوعاتی شاعری میں آپ کو ملکہ حاصل ہے۔ آپ کی خاص دل چسپیاں جدید سائنس اور ٹکنالوجی خصوصاً اردو کی ویب سائٹس میں ہے۔ اردو و فارسی میں یکساں قدرت رکھتے ہیں۔ روحِ سخن آپ کا پہلا مجموعہ کلام ہے۔

متعلقہ

Close