نظم

یاد رفتگاں: بیاد شیر میسور ٹیپو سلطان

آزادی کے مردِ مجاہد تھے ٹیپو سلطان

احمد علی برقیؔ اعظمی

یوم شہادت : ۴ مئی ۱۷۹۹
یومَ تدفین : ۵ مئی ۱۷۹۹

آزادی کے مردِ مجاہد تھے ٹیپو سلطان
جن کی شجاعت اور شہامت میں ہے الگ پہچان

حیدر علی کے یہ فرزند تھے ان کی طرح شیرِ میسور
جن کی فداکاری ہے جہاں میں کارِ عظیم الشان

وقت کی ہے اک اہم ضرورت ذہن میں ہو محفوظ
اپنی کتابِ آزادی کا یہ زریں عنوان

اردو اخباروں کے ضمیمے کرتے ہیں ان کو یاد
جان کے شاید اہلِ وطن ہیں اب اُن سے انجان

صفحۂ ذہن سے نسلِ جواں کے محو نہ ہوجائیں وہ کہیں
چار مئی کو ہنستے ہنستے دے دی جنھوں نے جان

اُن کی قربانی کا صلہ دیں یا کہ نہ دیں پر رکھیں یاد
جذبۂ حُبِ وطن ہے اُن کا اک آدرش مہان

اُن کے نقوشِ قدم گر ہوں گے اپنے مشعلِ راہ
جاری و ساری رہے گا برقیؔ ان کا یہ فیضان

مزید دکھائیں

احمد علی برقی اعظمی

ڈاکٹر احمد علی برقیؔ اعظمی اعظم گڑھ کے ایک ادبی خانوادے سے تعلق رکھتے ہیں۔ آپ کے والد ماجد جناب رحمت الہی برقؔ دبستان داغ دہلوی سے وابستہ تھے اور ایک باکمال استاد شاعر تھے۔ برقیؔ اعظمی ان دنوں آل آنڈیا ریڈیو میں شعبہ فارسی کے عہدے سے سبکدوش ہونے کے بعد اب بھی عارضی طور سے اسی شعبے سے وابستہ ہیں۔۔ فی البدیہہ اور موضوعاتی شاعری میں آپ کو ملکہ حاصل ہے۔ آپ کی خاص دل چسپیاں جدید سائنس اور ٹکنالوجی خصوصاً اردو کی ویب سائٹس میں ہے۔ اردو و فارسی میں یکساں قدرت رکھتے ہیں۔ روحِ سخن آپ کا پہلا مجموعہ کلام ہے۔

متعلقہ

Close