نظم

یاد رفتگاں: بیاد قیصر صدیقی سمستی پوری مرحوم

تاریخ وفات : ۴ ستمبر ۲۰۱۸

احمد علی برقیؔ اعظمی

نہیں رہے قیصر صدیقی تھے جو سمستی پور کی شان
جن کی تھی دنیائے ادب میں سب سے الگ اپنی پہچان

ہیں تاریخ ادب کی زینت ان کی نظمیں اور غزلیں
شاید ہی ادبی دنیا میں ہو ان سے کوئی انجان

ٹی سیریز میں مل جائیں گے ان کے صدہا اردو گیت
وردِ زباں قوالوں کے ہے ان کی غزلوں کا دیوان

جن میں رہتے تھے اکثر وہ سب کی توجہ کا مرکز
ہو گئی محفلِ شعر و سخن وہ ان کے جانے سے سنسان

گنگا جمنی قدروں کو اس دور میں وہ دیتے تھے فروغ
رکھتے تھے ملحوظ ہمیشہ سب کے ذوق کا وہ سامان

کرتے تھے سب کی دلجوئی جو بھی ان سے ملتا تھا
اسی لئے مداح ہیں ان کے بچے بوڑھے اور جوان

انسانی قدروں کو بناتے تھے اپنا موضوعِ سخن
ان کی کتاب زیست کا برقیؔ ہے بیحد دلکش عنوان

مزید دکھائیں

احمد علی برقی اعظمی

ڈاکٹر احمد علی برقیؔ اعظمی اعظم گڑھ کے ایک ادبی خانوادے سے تعلق رکھتے ہیں۔ آپ کے والد ماجد جناب رحمت الہی برقؔ دبستان داغ دہلوی سے وابستہ تھے اور ایک باکمال استاد شاعر تھے۔ برقیؔ اعظمی ان دنوں آل آنڈیا ریڈیو میں شعبہ فارسی کے عہدے سے سبکدوش ہونے کے بعد اب بھی عارضی طور سے اسی شعبے سے وابستہ ہیں۔۔ فی البدیہہ اور موضوعاتی شاعری میں آپ کو ملکہ حاصل ہے۔ آپ کی خاص دل چسپیاں جدید سائنس اور ٹکنالوجی خصوصاً اردو کی ویب سائٹس میں ہے۔ اردو و فارسی میں یکساں قدرت رکھتے ہیں۔ روحِ سخن آپ کا پہلا مجموعہ کلام ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

متعلقہ

Close