نظم

یاد رفتگاں: بیاد مولوی خدا بخش خان

تاریخ تولد: ۲ اگست ۱۸۴۲ .تاریخ وفات: ۳ اگست ۱۹۰۸

احمد علی برقیؔ اعظمی

تھے خدا بخش محسنِ اردو
جن کا ممنون ہے جہانِ ادب

دے گئے ہم کو ایسی وہ میراث
ہوتے ہیں بہرہ مند جس سے سب

جو اکٹھا کئے تھے مخطوطات
ہیں بقائے ادب کا اپنے سبب

صدق دل سے یہی دعا ہے مری
ان پہ نازل ہو رحم و فضلِِ رب

ان کا یومِ وفات تین اگست
کیوں نہ برقی ؔ ہو وجہہِ رنج و تعب

مزید دکھائیں

احمد علی برقی اعظمی

ڈاکٹر احمد علی برقیؔ اعظمی اعظم گڑھ کے ایک ادبی خانوادے سے تعلق رکھتے ہیں۔ آپ کے والد ماجد جناب رحمت الہی برقؔ دبستان داغ دہلوی سے وابستہ تھے اور ایک باکمال استاد شاعر تھے۔ برقیؔ اعظمی ان دنوں آل آنڈیا ریڈیو میں شعبہ فارسی کے عہدے سے سبکدوش ہونے کے بعد اب بھی عارضی طور سے اسی شعبے سے وابستہ ہیں۔۔ فی البدیہہ اور موضوعاتی شاعری میں آپ کو ملکہ حاصل ہے۔ آپ کی خاص دل چسپیاں جدید سائنس اور ٹکنالوجی خصوصاً اردو کی ویب سائٹس میں ہے۔ اردو و فارسی میں یکساں قدرت رکھتے ہیں۔ روحِ سخن آپ کا پہلا مجموعہ کلام ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

متعلقہ

Close