محمد الیاس گھمن

محمد الیاس گھمن

مولانا محمد الیاس گھمن امیرعالمی اتحاد اہل السنت والجماعت ہیں۔

قرآنی آیات کی روشنی میں دعا کی اہمیت

  جس سے دعا مانگی جا رہی ہو وہ اس کو سن بھی سکتا ہواور جانتا بھی ہو کہ کیا مانگا جا رہا ہے۔ اس لیے ایسی ذات سے دعا مانگنے کا حکم ہے جو سنتی بھی اور جانتی بھی ہے۔ سننے کے مفہوم میں بہت زیادہ وسعت ہے ہر کسی کی ہر وقت سنے اور علم کے مفہوم میں بھی بہت وسعت ہے کہ ہر کسی کی ہر زبان کی ہر  بات کو جانے بلکہ اس میں بھی مزید وسعت ہے کہ وہ یہ بھی جانتا ہو کہ کسے، کس وقت ،کیا اور کیسے دینا ہے ؟ اور کسے، کب ،کیا اور کون سی چیز نہیں دینی ؟

مزید پڑھیں >>

فاذکرونی اذکرکم

 ہم اللہ کو یاد کریں مخلوق اور مملوک ہونے کے ناطے ہمارا حق بنتا ہے اور اللہ بھی ہمیں یاد فرمائیں خالق، مالک ہونے کے باوجود یہ اس کا محض فضل، کرم، لطف اور احسان ہے۔ یہ دلیل محبت ہے اگر انسان اس کو عقل کی گہرائیوں سے جان لے اور دل کی گہرائیوں سے مان لے تو محبت الٰہی اس میں رچ بس جائے گی اور اللہ کی نگاہ میں اس کا شمار اولیاء اللہ میں ہونے لگے۔

مزید پڑھیں >>

دنیاوی آزمائشیں

   سخت سردی یا شدید گرمی کی وجہ سے پھلوں میں کمی آجاتی ہے یا کبھی آفت سماویہ کی وجہ سے پھل خراب ہو جاتا ہے یا پھر اس میں کیڑے وغیرہ پڑ جاتے ہیں یا پھلوں میں رس نہیں رہتا اور کبھی کبھار پھلوں کا حجم کم ہو جاتا ہے۔ اس کے ذریعے بھی انسان پر آزمائش آتی ہے۔

مزید پڑھیں >>

جمعۃ الوداع اور قضائے عمری!

ہماری قوم کی بدقسمتی یہ ہے کہ عبادات میں افراط و تفریط کی شکار ہے۔ سنت میں بدعت کی ملاوٹ اور دین کے ثابت شدہ احکام و مسائل میں کمی و بیشی کا مرض اس کا سب سے بڑا المیہ ہے، چنانچہ جمعۃ الوداع کے بارے میں بھی ہماری قوم اسی صورتحال سے دوچار ہے۔ بطور خاص اس دن جس مسئلہ کو زیادہ زیر بحث لایا جاتا ہے وہ ہے فوت شدہ نمازوں کو ادا کرنے کا۔

مزید پڑھیں >>

عشرۂ مغفرت ،اسبابِ مغفرت اور اہلِ مغفرت!

رمضان المبارک کے ان درمیانی دس دنوں میں اللہ کریم اپنے بندوں کی بڑے پیمانے پر مغفرت فرماتے ہیں ، دعا ہے کہ اللہ کریم ہمیں بھی اپنے مغفور بندوں میں شامل فرمائے۔ یوں تو اسباب مغفرت بہت زیادہ ہیں لیکن ہم ان میں سے چند ایک کا تذکرہ کرتے ہیں ۔

مزید پڑھیں >>

 سیدنا ابو بکر صدیق رضی اللہ عنہ

سیدنا صدیق اکبر رضی اللہ عنہ کے بے شمار کارنامے ایسے ہیں جن پر دنیا رہتی دنیا تک ناز کرے گی ۔ حالانکہ آپ صلی اللہ علیہ وسلم کی وفات کے بعد مختلف ایسے فتنے رونما ہوئے جو اسلام کو جڑ سے اکھاڑ پھینکنے کے لیے اپنی توانیاں صرف کر رہے تھے ۔ ان میں مدعیان نبوت کا فتنہ سر فہرست ہے ۔یمن میں اسود عنسی ، یمامہ میں مسیلمہ کذاب ، جزیرہ میں سجاح دختر حارث ، بنو اسد و بنو طی میں طُلیحہ اسدی نے نبوت کے دعویٰ داغ دیے ۔ختم نبوت کوئی معمولی مسئلہ نہ تھا کہ جس کے لیے مصلحت اختیار کر لی جاتی ۔ بلکہ یہ تو اسلام کے اساسی و بنیادی عقائد میں شامل ہے ۔ اس لیے اس فتنے کے خلاف سیدنا صدیق اکبر نے اپنی تمام تر صلاحیتیں بروئے کار لائیں اور لشکر اسلامی کو بھیج کر ان کا قلعہ قمع کیا۔

مزید پڑھیں >>

امت کا رہنما طبقہ: صحابہ کرام!

اللہ جل شانہ نے صحابہ کرام کو اپنے نبی کی صحبت اور دین کی اشاعت کے لیے منتخب کیا تھا، اس لیے ان کی فضیلت کو دل و جان سے تسلیم کرتے ہوئے ان کے نقش قدم پر چلنے کی کوشش کی جائے۔ اسلامی عقائد اور انسانی اخلاق کی اصلاح ویسے ہونی چاہیے جیسے صحابہ نے محنت کر کے ساری دنیا میں اپنے عمل سے واضح کی۔

مزید پڑھیں >>

ویلن ٹائن ڈے: انسانی اور اسلامی نقطہ نظر سے!

تاریخ میں اس دن سے اور بھی کئی منسوب داستانیں ہیں۔ ایک دوسرے کو پھول دیتے وقت یہ بھول جاتے ہیں کہ مردو عورت کا یہ بے حجابانہ ملاپ جہاں عورت کے ماتھے سے حیاء کا زیور لوٹ کر ذلت کا داغ لگا تا ہے وہاں پر مرد کے سر سے انسانیت کا تاج اتار کر اسے شرم سے جھکا دیتا ہے اور دونوں کو انسانوں کی وادی سے نکال کر درندگی کے جنگل میں چھوڑ دیتا ہے۔

مزید پڑھیں >>

اْمّ المومنین سیدہ زینب بنت خزیمہ رضی اللہ عنہا

رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کی وہ واحد زوجہ مطہرہ جنہوں نے بہت کم عرصہ آپ کی معیت میں گزار ا اور 4ہجری ربیع الثانی کے مہینے میں وفات پائی اور آپ کا جنازہ خود رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے پڑھایا، جنت البقیع میں مدفون ہیں ۔

مزید پڑھیں >>

!!ہیپی نیو ائیر

افسوس صد افسوس !کہ ہمارے ملک میں جب سے مغربی اور یورپی تہذیب نے اپنے منحوس قدم ایسے گاڑے ہیں کہ گوروں سے زیادہ ہمارے مسلم نوجوان بھٹک کر رہ گئے ہیں۔ کبھی ویلنٹائن ڈے ، کبھی بلیک فرائیڈے اور کبھی نیو ائیرنائٹ جیسے غیر اسلامی بلکہ غیر فطری پروگرامز میں عریاں ڈانس ، جنسی اختلاط ، شراب و کباب اور ہر وہ کام جس کی اجازت نہ ہمارا اسلام دیتا ہے اور نہ ہی ہماری مشرقی تہذیب ایسے دھبوں کو اپنے اجلے دامن پر برداشت کرتی ہے۔

مزید پڑھیں >>