معاشرہ اور ثقافت

کرب ایک حقیقت کا!

وہ خاموش ہوکر کچھ دیر جیسے خلا میں کچھ دیکھتی رہی پھر بولی۔ ’’تم ہم کو بہت اچھا لگا۔ مسلم لوگ ہم کو بہت اچھا لگتا ہے۔ آخر ہمارا پیارا باپ بھی تو مسلم ہی تھا نا۔ ہم کو یہ سلوار اور شرٹ بھی اچھا لگتا ہے۔ مگر ہم اِس کو اِدھر پہن نہیں سکتا۔ اور پھر اِس نوکری میں یہ ڈریس کیسے چلے گا ؟ ‘‘

مزید پڑھیں >>

عہدے امانت ہیں ان میں خیانت نہ کریں!

آخرت میں صرف وہ لوگ سرخرو ہوں گے جنہوں نے دنیا میں اپنے منصب اور عہدوں کو امانت سمجھ کر اس کی ذمہ داریوں کوعدل و احسان کے ساتھ انجام دیا ہوگا جو کہ آسان کام نہیں ہے اور جس نے اپنی ذمہ داریوں میں خیانت کی ہوگی وہ وہاں رسوا اور ذلیل کیا جائے گا اور جہنم اس کا ٹھکانہ ہوگا۔ اس لئے اول درجہ میں تو ہمیں جاہ طلبی کے مرض سے ہی چھٹکارا حاصل کرنا چاہیے کہ اکثر اوقات یہ دنیا میں بھی آزمائش اور رسوائی کا سبب ہوجاتا ہے جیسا کہ آج کل عام طور پر دیکھنے کو ملتا ہے اور آخرت کا معاملہ تو فرائض کی انجام دہی میں کوتاہی کی صورت میں اور بھی سنگین ہے۔

مزید پڑھیں >>

صنفی توازن کی اسلامی تشریح: مولانا سلطان احمد اصلاحی کے حوالے سے

   مولانا سلطان احمد اصلاحی نے ا پنی تحریروں کے ذریعہ ہر طرح صنفی عدم  توازن کے خلاف آواز بلند کی اور معاشرے کے اس اہم مسئلے کا اسلامی حل پیش کیا،یہ بات دیگر ہے کہ بعض اوقات ان کے یہاں فکری توسع کے عناصر کچھ زیادہ ہی ہوجاتے ہیں ،جس سے ان کا قاری کچھ دیر کے لیے حیرتی ہوجاتا ہے۔  

مزید پڑھیں >>

یہ غیرت تو نہیں

رپورٹ شدہ اعدادوشمار کو اکٹھاکیاجائے توایک محتاط اندازے کے مطابق 2015ء میں ملک میں 1096 خواتین کو غیرت کے نام پر قتل کیا گیا جبکہ 2014ء میں غیرت کے نام پر قتل کی جانے والی خواتین کی تعداد 1005 رہی۔ 2013ء میں قتل ہونے والی خواتین کی تعداد 869 تھی۔ایک رپورٹ کے مطابق پاکستان میں پچھلے پانچ سال میں پنجاب اور سندھ میں پانچ ہزار خواتین غیرت کی بھینٹ چڑھ گئیں ۔

مزید پڑھیں >>

ہریانہ کے اسکول میں معصوم  بچے کا قتل

گڑگاوں (ہریانہ) میں Riyan International School کے 7 سالہ اور درجہ دوم کے معصوم طالبِ علم پردیومن کا بس کنڈیکٹر کے ہاتھوں بے رحمی سے قتل کیا جانا انتہائی افسوسناک ہے ، خبر کے مطابق بچہ بیت الخلاء میں گیا ، تو پہلے سے موجود وہاں بس کنڈیکٹر نے اس بچے کو پکڑ کر اس کے ساتھ جنسی زیادتی کی کوشش کی ، بچے نے شور مچانے کی کوشش کی تو 42 سالہ بس کنڈیکٹر اشوک نے چاقو سے گلے پر دو بار حملہ کر کے قتل کر دیا ، مجرم نے جرم قبول کر لیا ہے

مزید پڑھیں >>

پیشہ وارانہ اقدار وقت کی اہم ضرورت!

زندہ رہنا اور زندگی کی راہیں ہموار کرنا اچھی قدریں ہیں یہی وجہہ ہے کہ لوگ مصیبت زدہ لوگوں کی مدد کرتے ہیں اور کسی کے وقت پر کام آکر طمانیت محسوس کرتے ہیں۔ انسان اپنے گھر سے جب باہر کی زندگی میں قدم رکھتا ہے اور کچھ پیشے اختیار کرتا ہے تو اس پیشے سے وابستگی کے دوران بھی اس سے امید کی جاتی ہے کہ وہ اچھی قدریں پیش کرے۔

مزید پڑھیں >>

دم بھر کا یہ سفینہ،  پل بھر کی یہ کہانی!

مجھے افسوس اس وجہ سے بھی ہیکہ جس نے مجھے مصائب کے وقت حوصلہ دیا اور مجھے ہمیشہ عزت کی نگاہ سے دیکھا میں زندگی میں اسکی قدر نہ کر سکا آج افسوس کر کے بھی کیا فائدہ جبکہ وہ اس دنیا میں نہیں ہے ہر بار اس نے ضد کی کہ میں اسکی دوستی کی تعریف کروں مگر کبھی اسکا دل رکھنے کیلیئے بھی میں نہ کر سکا اور ہر بار وقت کی تنگی کا شکوہ کرکے اسکی معصوم عادتوں کو ٹالٹا رہا_

مزید پڑھیں >>

آستھا اور پرمپرا کے نام پر روا حیوانیت کے تماشے!

"آستھا" اور "پرمپرا" کیاسے کیا کرادیتی ہے اور کس طرح پل بھر میں آدمی کو انسان سے حیوان بنادیتی ہےاس کے تماشے ہمارے ملک میں آئے دن دیکھنے کو ملتے رہتے ہیں ۔ حالیہ تماشا ہریانہ میں دیکھنے کو ملا جس نے پورے ملک کو اپنی طرف متوجہ کرلیاتھا اور اس وقت بھی ہر طرف اس کے چرچے ہورہے ہیں۔

مزید پڑھیں >>

اندھی عقیدت اور ہمارا معاشرہ

ہندوستان دنیا کے ان ممالک میں ہے جہاں بھوک سے مرنے والے افراد کی تعدادکثیر ہے، غربت سے لڑتے افراد بے شمار ہیں، اسکول نہ پہنچنے والے بہت سے بچے ہیں، کیا ضرورت ہے باباؤں پر دولت لٹانے کی ؟بھوکوں کو کھانا کھلائیے، غریبوں کو لباس پہنائیے، غیر تعلیم یافتہ بچوں کو علم کی دولت سے آشنا کرائیے، ان امور پر دولت خرچ کیجئے، قلبی سکون بھی حاصل ہوگا اور قربت الٰہی بھی۔

مزید پڑھیں >>

دو دو بونس: ایک سچا واقعہ

کیوں کہ مجھے اللہ تعالٰی نے بغیر کسی محنت کے دو دو بونس دییے ہیں . اس سے گفتگو کرنے کے بعد اندازہ ہوا کہ آج بھی بے لوثی کی زندہ مثالیں موجود ہیں جو میرے اس دوست کی طرح کہیں بھیڑ میں گم ہو جاتی ہیں ...!

مزید پڑھیں >>