خصوصی

اترپردیش کا اسمبلی انتخاب اور مسلم قیادت!

اگر ایک نگاہ 2012 کے اسمبلی انتخاب کے نتائج پر ڈالی جائے تو67 مسلم اسمبلی میں آسکے جبکہ دوسرے نمبر پر آنے والوں کی تعداد63تھی سب سے زیادہ حیرت کی بات یہ ہے کہ ان میں 5 2مسلمان سماجوا دی سے 19بھاجپاسے، 8بہوجن سے اورایک مسلمان کانگریس سے ہار کر اسمبلی سے باہر رہنے پر مجبور ہوئے تھے اس سے ایک بات یہ اور بھی اخذ کیا جا سکتا ہے کہ جب کسی مسلمان کے مقابلہ میں کوئی آزاد امیدوار مضبوط نظر آتا ہے تو وہ انہیں اسمبلی میں بھیجنا بہترسمجھتے ہیں اوروہ کسی مسلم کے بدلے اپنی پارٹی سے بھی بغاوت کراسکتے ہیں۔

مزید پڑھیں >>

کیا ہم اورزیادہ برے دنوں کے استقبال کی تیاری کریں؟

پارلیمنٹ کے سرمائی اجلاس کے آخری دنوں میں کانگریس کے نائب صدر راہل گاندھی نے کہنا شروع کیا تھا کہ مجھے پارلیمنٹ میں بولنے نہیں دیا جارہا ہے۔ میرے پاس وزیر اعظم نریندر مودی کے خلاف ان کے بھرشٹاچار کے …

مزید پڑھیں >>

سیاست میں جوتوں کا کیا کام۔۔۔!

گوگل بتاتا ہے کہ کانگریس نائب صدر راہل گاندھی اور وزیر اعلی کیجریوال پر دو دو بار جوتے پھینکے گئے ہیں . اخباروں نے ان واقعات کے تناظر میں بھی خبر بنائی ہے. زیادہ تر لوگ مزے لے رہے ہیں . لطیفے بناتے بناتے ایک قسم کی غیر ضروری سیاسی ثقافت کو فروغ دے رہے ہیں . 2009 میں صحافی جرنیل سنگھ نے پی چدمبرم پر نو نمبر کا رباک جوتا پھینک دیا تھا. کانگریس ہیڈ کوارٹر کے اندر یہ واقعہ ہوا تھا اس وقت بھی ان کے خلاف کوئی مقدمہ درج نہیں ہوا اور نہ ہی گرفتاری ہوئی اور نہ ہی چد مبرم نے انہیں دیکھ لینے کی دھمکی دی

مزید پڑھیں >>

بی ایس پی جوان تیج بہادر نے سوال تو میڈیا سے بھی کیا ہے۔۔۔

بی ایس ایف کے جوان تیج بہادر یادو کے ویڈیو لے کر میڈیا ضرور حکومت سے جواب مانگ رہا ہے، مگر اپنے ویڈیو میں تیج بہادر نے میڈیا سے بھی سوال کیا ہے. میڈیا سے بھی جواب مانگا ہے. ان کی یہ لائن تیر کی طرح چبھتی ہے کہ ہم جوانوں کے حالات کو کوئی میڈیا بھی نہیں ظاہر کرتا ہے. میڈیا نے بھی تیج بہادر جیسے جوانوں کا یقین توڑا ہے. فوج، نیم فوجی فورس اور پولیس میں جوانوں کی زبان پر تالے جڑ د یے جاتے ہیں. میڈیا اکثر سربراہان سے بات کر چلا آتا ہے. پریڈ کے وقت کیمرے ان جوانوں کے جوتوں کی تھاپ کو کلوز اپ میں ریکارڈ کر رہے ہوتے ہیں، فخر دکھا رہے ہوتے ہیں، ہوتا بھی ہے، لیکن کاش کیمرے ان جوانوں کے پیٹ بھی دکھا دیتے جو ممکن ہے پریکٹس کے ساتھ ساتھ بھوک سے بھی پچكے ہوئے ہوں.

مزید پڑھیں >>

اہل پنجاب تبدیلی کے خواہاں!

4؍جنوری 2017الیکشن کمیشن آف انڈیا نے ملک کی پانچ ریاستوں میں اسمبلی الیکشن کروانے کا اعلان کیا۔ لیکن اس اعلان سے قبل ہی ان پانچ ریاستوں میں اسمبلی الیکشن کی تیاریوں میں تمام ہی سیاسی پارٹیاں مصروف ہو چکی تھیں ۔ ان پانچ ریاستوں میں جن دو ریاستوں کا الیکشن ملک اور اہل ملک کے لیے اہم حیثیت رکھتا ہے ، ان میں اول الذکر ریاست اترپردیش ہے تو وہیں موخر الذکر پنجا ب ہے۔

مزید پڑھیں >>

کامن ویلتھ گیمس کا گھوٹالہ اور دنگل کا جلوہ …

ہندوستان کی لڑکیوں آپ کو دنگل مبارک ہو. دنگل دیکھ سکتے ہیں اور خود کو تبدیل لو. باقی جس معاشرے میں آپ بدلیں گی، وہ نہیں بدلے گا. مردوں کے پاس طاقت کے اور بھی اکھاڑے ہیں. ان کا آخری گڑھ میدان نہیں ہے، سیاست ہے. آپ نے دنگل جیت لیا ہے، سیاست نہیں. اس محاذ پر بھی گیتا اور ببیتا کی سخت ضرورت ہے. اس سنہرے دن کا انتظار کروں گا.

مزید پڑھیں >>