دیگر نثری اصناف

اردو تلفظ و املاء کے چند اہم مسائل (قسط دوم)

اس قسم کے الفاظ کا املاءجب مختلف دیکھا تو ذہن میں سوال پیدا ہوتا کہ درست املا ءکیا ہے ؟ اس کا جواب مولانا ابوالکلام آزاد کی معروف زمانہ کتاب غبار خاطر کا مقدمہ از قلم مالک رام پڑھنے کے بعد ملا۔ مالک رام کے بیان کردہ اصول کو سمجھنے سے پہلے ایک ضابطے کا سمجھنا ضروری ہے۔ جب ہم کسی دوسری زبان کے لفظ کو اردو میں لکھیں گے تو ممکنہ طور اس کی تین صورتیں ہو سکتی ہیں :1۔حرف کے بدلے میں حرف:جیسے انگریزی لفظ catمیں تین حروف ہیں ،اس کو اردو میں ’کیٹ‘ لکھا جاتا ہے۔

مزید پڑھیں >>

سعودعثمانی: کہتاہے ہراک بات مگرحسنِ ادب سے

یقیناً ہم جب سعودعثمانی کی شاعری سے روبروہوتے ہیں، توایسا محسوس ہوتاہے کہ اس کے اندر ایک مقناطیسی صلاحیت  ہے، جوہمیں اپنی طرف کھینچ رہی ہے۔ ان کے شعری موضوعات اور جہتوں میں بھی بے پناہ تنوع ہے ، بطورِ خاص اپنی ذات کے اندرون و بیرون کی دریافت اور عرفانِ خودی کے حوالے سے سعودعثمانی کے اشعارکچھ الگ پہلووں سے آشناکرواتے ہیں

مزید پڑھیں >>

محمد شفیع جرال: بیباک قلم کار

 کسی نے ادب میں نام کمایا تو کسی نے صحافت میں ،کسی نے رپورٹنگ میں شہرت پائی تو کسی نے کالم نگاری میں ،کسی کی صاف گوئی پہچان بنی تو کسی کی بے باکی۔مگر محمد شفیع جرال ایسی شخصیت ہیں جس نے ادب ،صحافت اور بحیثیت استاد بیک وقت اپنی شناخت حاصل کی ۔قلم جب بھی اُٹھا صاف گوئی و بے باکی وجہ مقبولیت بنی۔

مزید پڑھیں >>

خلیل الرحمن اعظمی ادب کے آئینے میں

اردو شعر وادب میں خلیل الرحمن اعظمی کا نام بھی سر فہرست ہے ،خلیل الرحمن اعظمی ایک جدید غزل گو شاعر ہیں جو ابتداء میں ترقی پسند تحریک سے تعلق رکھتے تھے لیکن بعد میں جدیدیت سے جڑ گئے ۔ خلیل الرحمن اعظمی مشرقی یوپی کے ایک ممتاز علمی و دینی گھرانے کے چشم وچراغ تھے۔ان کی پرورش وپرداخت گہرے مذہبی ماحول میں ہوئی تھی۔

مزید پڑھیں >>

اردو املاء کے چند اہم توجہ طلب مسائل

’اردو تحریر باذریعہ انگریزی حروف‘یہ ایک موبائل ایپ کا تعارفی جملہ ہے ۔اسی طرح آپ گوگل پر مشرف بہ اسلام اور بہ الفاظ دیگر بھی دیکھ سکتے ہیں ۔اسی قسم کی سینکڑوں اغلاط آپ کو ذرائع ابلاغ میں نظر آئیں گی جو دوسروں کوغلط الفاظ سکھانے کا فریضہ سرانجام دے رہے ہیں ۔

مزید پڑھیں >>

اُردو اکادمی بہار کی عظمت کو سلام

اُردو کی قسمت اچھی تھی کہ مسلمانوں کے بہت بڑے، بڑے اور ہر طرح کے دینی مدارس کے ذریعے تعلیم زبان اُردو ہے اور اُردو میں فارسی اور عربی کے الفاظ ہر زبان سے زیادہ ہیں اس لئے ہر سال ہزاروں لڑکے جو فارغ ہوکر نکلتے ہیں ان میں اُردو کے بہت بڑے ادیب، مصنف اور مقرر ہوکر نکلتے ہیں ۔ اور ان کے دم سے اُردو زندہ بھی ہے اور ترقی بھی کررہی ہے۔

مزید پڑھیں >>

آوارہ ادب!

آوارہ ادب عام طور پر غلاموں کا ادب ہوتا ہے … خواہ وہ ظلم و جارحیت کے غلام ہوں یا خواہشات نفس کے … جب انسان روئے زمین کے کسی ظالم و سرکش حکمراں یا نفس کی کسی خواہش کا غلام بن جاتا ہے تو وہ آزادی کی کھلی فضا میں پرواز نہیں کرسکتا۔ یہی نہیں بلکہ وہ زمین کی پستیوں میں جاپہنچتا ہے اور شہوت یا غلامی کے گڑھے میں جاگرتا ہے۔

مزید پڑھیں >>

احسان دانش: شاعر فطرت!

احسان دانش کی شاعری ہمارے سماج کی شاعری ہے ،ہمارے دکھ درد کا بیان ہے ،ہماری زندگی کا آئینہ ہے ،وہ ہمارے احساسات و جذبات کو لفظوں کے حسیں سانچہ میں ڈھالتے ہیں ،انہیں ہماری روایتیں عزیز ہیں ،مشرقی روایتوں کے وہ دلداہ ہیں ،وہ ترقی پسند نہیں ہیں لیکن سچے ترقی پسند کو سماج کے لئے بہتر خیال کرتے ہیں ،احسان دانش کا سب سے بڑا کمال یہ ہے کہ انہوں نے بیسوی صدی کی شعراء کے درمیان اپنے فن کی وجہ سے اپنا مقام اور اپنی حیثیت ثابت کی ہے

مزید پڑھیں >>

ڈاکٹر فرقان کے افسانوں میں ہندوستانی عناصر !

ڈاکٹر فرقان اپنے اسلوب ’ موضوع مواد ‘ کردار اور پلاٹ کے اعتبار سے اپنے افسانوں کا بنیادی پہلو معاشرے کی ہی جہات سے لیتے ہیں ۔وہ عصری تقاضوں اور مسائل کو جو صرف ہندوستان میں ہی درد سر بنے ہوئے ہیں اپنی تحریر میں ضبط قلم کرتے ہیں ۔ان کے افسانوں کے مطالعے سے یقینی طور پر یہ بات کہی جاسکتی ہے کہ ڈاکٹر فرقان اپنے عہد کی بھر پور نمائندگی کر رہے ہیں ۔

مزید پڑھیں >>