براؤزنگ زمرہ

تبصرۂ کتب

نفرت کی درس گاہیں!

کتاب کی مصنفہ ایک خاتون نازیہ ارم ہیں ، فیشن ڈزائن کے فیلڈ میں سرگرمِ عمل ہیں اور TheLuxuryLabel.inنامی سائٹ کی بانی ہیں ، یہ کتاب انھوں نے بڑی ریسرچ اور…

جہاد اور روح جہاد

زیر تبصرہ کتاب میں مصنف موصوف نے جہاد اور متعلقات جہاد پر گفتگو کی ہے۔ جہاد کوئی نیا موضوع نہیں ہے اور  ایسا بھی نہیں ہے کہ جہاد کے موضوع پر اس سے پہلے کوئی…

مٹھی بھرآسمان (شعری مجموعہ)

’’مٹھی بھر آسمان، اس لحاظ سے تو مٹھی بھر ہی ہے کہ اس میں شامل نظموں اور غزلوں کی تعداد مختصر ہے لیکن اس چھوٹے سے آسمان میں اوپرتلے کئی دائرے، قوسین اور…

طلبہ کے تین دشمن

تعلیمی اداروں میں ہونے والے انعامی مقابلوں میں اس طرح کی کتابیں طلبہ میں انعام کے طور پر دی جائیں۔ اور طلبہ سے بھی ان موضوعات پر مضامین لکھنے کی ترغیب دلائی…

بصائر قرآن

قرآن مجید دنیائے انسانیت کے لیے بصیرت و بصارت اور دنیا کو امن وامان کی آماجگاہ بننے کا حقیقی ذریعہ اور راستہ ہے کیوں کہ یہ تمام انسانوں کے لیے ہدایت اور رحمت…

اصلاح و تربیت کے رہنما اصول

تعلیم و تر بیت اور تزکیہ نفس اقامت دین کے حاملین کے لئے انتہائی ضروری ہے اور اس کے بغیر یہ کام منزل مقصودتک پہنچنے میں کامیاب نہیں ہو سکے گا۔تحر یک اسلامی نے…

کہیں چھاؤں مل نہ جائے

ڈاکٹر انجم بارہ بنکوی نے درست تجزیہ کیا ہے وہ لکھتے ہیں ’’سراج کے کلام میں ایک متوازن شائستگی اپنے پورے جلال و جمال کے ساتھ نظر آتی ہے۔ تجربات او ر مشاہدات…

آثار قلم

 آثار قلم استاذ محترم کی ان شاہکار تحریروں کا مجموعہ ہے جو انہوں نے مختلف ادوار و اوقات میں آسمان صحافت کے اپنے وقت کے ماہ تمام و بدر کامل اور ریاست…

آبِ حیات

عمیرہ کا اندازِبیان پاکستان کی ایک اور مقبول ناول نگار نمرہ احمد سے ملتا جلتا ہے۔ بلکہ اکثر لوگ عمیرہ احمد اور نمرہ احمد کے ناموں کے حوالے سے کنفیوژن کا شکار…

منزل ما دور نیست

طلباء کی ایک خاص نہج پر تربیت کی جارہی ہے جو انہیں وسعت نظری کے اعلانیئے کے باوجود تنگ نظری کا اسیر بناسکتی ہے۔ اسلاف سے رشتے کا انقطاع ایک طرح کی ہلاکت کے…

تمثیل نو: ادبی صحافت کا نقش

یہ کتاب ماہنامہ ’’تمثیل نو‘‘ کے تعلق سے ایک دستاویز کی حیثیت رکھتی ہے۔ اس کی روشنی میں جہاں بہت سے ادبی رویوں اور رجحانات سے واقفیت ہوتی ہے وہیں اردو ادب…

سہ ماہی ‘لوح’

پیش لفظ اور آخری چند صفحات میں انہوں نے اپنے اردو افسانے کے 115 سالہ سفر پر بے لاگ تبصرہ کیا ہے .میں مانتی ہوں کہ ہمارے نقاد گروپ اور تحریکوں کے شکار رہے ہیں…