جدیدیت کے گمراہ کن اور خطرناک اثرات (قسط دوم)

تعیشات زندگی کےنتیجےمیں اخراجاتِ زندگی بڑھ گیے۔ اپنی ذات ہی سب کچھ ہوگئی ہے۔ خواہشات نفس ہی الدین بن گیاہے۔ اس آئینہ خانےمیں اپنےہی نفس کی پرستش ہورہی ہےتوفطری اجتماعیت کیسےوجود پذیرہوگی؟فطری اجتماعیت کاپہلاادارہ خاندان ہوتاہے۔

جدیدیت کے گمراہ کن اورخطرناک اثرات (قسط اول)

جدیدیت کااصل مطلب اوراساس وحی پرمبنی نقلی علوم کوبے اعتبار سمجھنا اورعقلیت اورانسان پرستی اختیارکرناہے۔ اس لیےاس کادوسرانام انسان  پرستی(ہیومن ازم)بھی ہے۔ لہذامغرب کےبنیادی اصول آزادی، مساوات، ترقی کانصب العین عقل ہی کےذریعہ ممکن ہے۔

سید ابوالاعلی مودودی کا نظریہ سیاسی

سید مودودی کی سیاسی فکرموجودہ دورکے مسلمانوں کے مسائل کا  بہترین حل مہیاکرتی ہے۔برصغیرمیں جس عالم نےاسلامی ریاست کامکمل نقشہ فراہم کیاوہ سیدابوالاعلی مودودی تھے۔ انہوں نےصرف علمی بنیادوں پرکام ہی نہیں کیابلکہ عملی میدان میں بھی اسلامی ریاست…

عقیدہ ختم نبوت: قران و احادیث کی روشنی میں

رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کےصحابہ کااجماعی تعامل اوراس کےبعدامت محمدیہ کااجماع بھی اس بات پرپختہ یقین رکھتاہےکہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کےبعدکوئی نبی نہیں،نہ آپ کےبعدکسی نبی کاآناممکن ہےاورنہ کسی پروحی کاآناممکن ہےجوایسادعوی…

نسیم حجازی کی ناول نگاری (قسط 3)

نسیم حجازی ملت اسلامیہ کا وہ سرمایہ ہیں جن کے بغیر نئی نسل یہ کبھی جان ہی نہ پاتی کہ وہ درویش صفت اور خوابیدہ طبع انسان کون تھے جنہوں نے عالم عشق و مستی میں آواز کے سفر کی طرح وقت کے منجدھار اور جرآتوں کی رصد گاہ میں کھڑے ہو کر تاریخ کی…

نسیم حجازی کی ناول نگاری (قسط 2)

نسیم حجازی افغانستان کے جہاد سے بھی متاثر تھے اور ان کے قریبی لوگوں کا  کہنا ہے کہ اس موضوع پر وہ  ایک ناول زندہ پہاڑ کے نام سے لکھ رہے تھے لیکن روس کی شکست کے بعد مجاہدین کی آپس کی لڑائیوں سے بیزار ہوکر انہوں نے وہ مسودہ  ضائع کردیا۔

نسیم حجازی کی ناول نگاری (قسط 1)

 اردو ادب میں عبد الحلیم شرر  اور رتن ناتھ سرشار نے ناول کی ابتدا کی اور  مرزا ہادی رسوا نے اسے نکھارا۔  شرر نے پچیس تاریخی ناولوں میں  اپنا ناول ملک العزیز ورجنا 1988 میں اور اپنی وفات سےتقریباایک سال قبل  1925 میں  مینابازارلکھا ۔  ان کے…

مسلم پرسنل لا بورڈ: تعارف و خدمات

ہندوستان میں انگریزوں کی آمدسےپہلےجب مسلمان مسنداقتدارپرفائزتھےتو مسلمانوں کے تمام عائلی معاملات اسلامی قوانین کے مطابق طے پاتے تھے، لیکن جب انگریزسریرائےسلطنت ہوئےاورجہاں انہوں نےمسلمانوں کواقتدارسےبےدخل کیاوہیں انہیں اپنی شریعت اور تہذیب…

شیر میسور ٹیپو سلطان (قسط اول)

حضرت ٹیپو مستان رحمۃ اللہ علیہ کی دعا قبول ہوئی اور20؍ ذی الحجہ 1142ھ مطابق 20؍ نومبر 1750ء کو جمعہ کے دن حیدر علی کے گھر ایک چاند سا خوب صورت بیٹا پیدا ہوا۔ حیدر علی نے بارگاہِ الٰہی میں سجدہ شکر ادا کیا اور خزانے کا منہ کھول دیا۔ خوب…

مولانا سید ابو الاعلیٰ مودودیؒ اور تصورِ دین

چونکہ اللہ تعالی نے الدین کو قائم کرنے اور اسے جنسِ دین پر یعنی دنیا میں موجود غیر حقیقی، غیر فطری اور خالق کے بجائے انسانوں کے اپنے بنائے ہوئے نظام ہائے زندگی پر غالب کرنے حکم اپنے انبیا کو اور اپنے آخری پیغمبر صلی اللہ علیہ وسلم کو بلا…

یادِ ماضی

شاذو نادر ہی ہماری گفتگو میں مستقبل کے بارےمیں منصوبہ بندی یا آنے والے وقت کے ممکنہ مسائل سے نبردآزما ہونے کی تراکیب کے بارےمیں سوچا جاتا ہے۔ یادِ ماضی سے اس قدر اُلفت و یگانگت ہماری زندگی کے موثر پن کو معدوم کرنے میں اہم کردار ادا کرتی ہے۔…

مرزا اسداللہ خان غالب (آخری قسط)

مرزاکےاخلاق نہایت وسیع تھے،وہ ہرایک شخص سےجوان سےملنےجاتاتھا،بہت کشادہ پیشانی سےملتےتھےجوشخص ایک دفعہ ان سےمل آتاتھااس کوہمیشہ ان سےملنےکااشتیاق رہتاتھا.دوستوں کودیکھ کروہ باغ باغ ہوجاتےتھےاوران کی خوشی سےخوش اوران کےغم سےغم گین ہوتےتھے،

سید قطب شہیدؒ: حیات و خدمات

ہمیں ان لوگوں پر تعجب ہے جو مظلوم کو ظالم سے معافی مانگنے پر ابھارتے ہيں قسم بخدا اگر معافی کے چند الفاظ مجھے پھانسی سے نجات بھی دے سکتے ہوں تو ميں تب بھی يہ الفاظ کہنے پر آمادہ نہ ہوں گا ميں اسی حال ميں اپنے رب کے سامنے پيش ہونا پسند کروں…

ہندوستانی تہذیب پر مسلمانوں کے اثرات (قسط اول)

  برصغیر میں ٫خاندان، معاشرے کی بنیاد ہے اور کوئی درمیانی تفریق یا خاندان کا کوئی فرد اپنے آبا اجداد سے جدا نہیں سمجھا جاتا ہے۔ فرد کوئی چیز نہیں ہے، بلکہ وہ ماں باپ کی اولاد اور اس کے پیچھے کی پشتیں ، جن سے وہ پیدا ہوا ہے اور اس کے آگے کی…

اتحاد بین المسلمین کی ضرورت واہمیت

ایک ذمہ داری جو سب سے اہم ہے اور جس کا بیشتر تعلق علما اور بااثر ورسوخ شخصیتوں سے ہے وہ یہ ہے کہ وہ لوگ مسلمانو ں کو اختلافات پر اکسانے کے بجائے ان کے درمیان محبت و دوستی اور اتحاد کا بیج بونے کی مسلسل کوشش کرتے رہیں اس لئے کہ اتحاد ہی ایسی…

عظیم افسانہ نگار: سعادت حسن منٹو (آخری قسط)

منٹوکی یہی بےساختگی اوربےتکلفی ہےکہ قاری پوری طرح ان کی بات کوسمجھنےاورمتفق ہونےلگتاہے،قاری اورکہانی میں دوری یا بعد پیدانہیں ہوتا، ایک مقام ایساآتاہےکہ قاری خودکوکہانی میں شامل سمجھنےلگتاہےاورافسانےکی پوری اقلیم یعنی احساسات وجذبات،…

شادی میں تاخیر: ایک لمحہ فکریہ

وجوہات جو بھی ہوں لیکن یاد رہے کہ اس سے ہمارا معاشرتی نظام درہم برہم ہو رہا ہے۔ اور ہماری نوجوان نسل، بروقت شادی نہ ہونے کی وجہ سے، میڈیا کی پھیلائی ہوئی، بے حیائی کا بآسانی شکار ہو رہی ہے۔ اور جو محفوظ ہے، وہ اپنے ساتھ ایک خاموش نفسیاتی…

خوش گوار ازدواجی زندگی کے لیے مطلوب مثبت رویے

اگرآپ دونوں کسی سماجی اجتماع میں ہوں اور آپ کوکچھ گڑ بڑ محسوس ہوتو سب کے سامنے اس کےبارےمیں مت پوچھیں,اپنے رفیق حیات کوایک جانب لے جائیں اور گفتگو کریں تاکہ اس کو احساس ہو کہ آپ واقعی اس کی عزت اور احترام کرتےہیں.

مرزا اسداللہ خان غالب (قسط اول)

مرزا غالب اردو زبان کے سب سے بڑے شاعر سمجھے جاتے ہیں۔ ان کی عظمت کا راز صرف ان کی شاعری کے حسن اور بیان کی خوبی ہی میں نہیں ہے۔ ان کاا صل کمال یہ ہے کہ وہ ز ندگی کے حقائق اور انسانی نفسیات کو گہرائی میں جاکر سمجھتے تھے اور بڑی سادگی سے عام…

اقبال: بانگ درا اور فکر اسلامی

اقبال کی دور اندیشی سے انکار نہیں کیا جا سکتا تھا، اقبال وہ سمندر ہیں جس میں جتنا ڈوب کر دیکھا جائے اتنا ہی اور ڈوبنے کا دل کرتا ہے۔ اقبال وہ ہیرا ہے جس کی آب و تاب آج بھی کئی دلوں میں تپش پیدا کر رہی ہے۔ کہیں کسی چنگاری کی بنیاد رکھ رہی…

عظیم اردو افسانہ نگار سعادت حسن منٹو

سعادت حسن منٹو,بیسویں صدی کے عظیم الشان افسانہ نگارتھے,جنہوں نےاپنےافسانوں میں وقت کےبےرحم اورظالم سماج کوبالکل ننگاکرکےرکھ دیا,ان کےاندرمنافقت نہیں تھی وہ بدصورتی کوخوب صورت بناکرپیش کرنےکےقائل نہیں تھے,بغیرلاگ لپیٹ کےاپنی بات کہہ دیناان…

علامہ حمیدالدین فراہی: حیات وخدمات

جس نےمسلسل چالیس برس تک قران مجید کی خدمت کی,جس نےمعارف قران کی تحقیق میں سیاہ بالوں کوسفیدکیا,جس کی تفسیروں سےعرب وعجم کےہزاروں مسلمانوں میں تدبرفی القران کاذوق پیداہوا جس کی تحریروں کاایک ایک لفظ گواہی دےرہاہےکہ وہ قران کاسچاعاشق ہےاوراس…

 شیعہ مکاتب فکر کا آغاز و ارتقا

شیعوں کے تمام فرقے تاویل کے قائل ہیں ۔ ان کے یہاں اس آیت ”لا یعلم تا ویلہ الا اللہ والر سخون فی العلم یقولون آمنا بہ“ میں الا للہ پر وقف کرنا درست نہیں ہے۔ ان کے نزدیک وہ علماء بھی جو علم میں راسخ رہے ہیں ، یعنی انبیا، اوصیا اور ائمہ تاویل…

دبستان لکھنؤ و دلی کی شعری خصوصیات

شعرائے دہلی کے کلام میں جہاں زبان میں سلاست و روانی کا عنصر نمایاں ہے وہاں اختصار بھی ہے۔ اس دور میں دوسری اصناف کے مقابلے میں غزل سب سے زیاده نمایاں رہی ہے۔ اور غزل کی شاعری اختصار کی متقاضی ہوتی ہے۔ اس میں نظم کی طرح تفصیل نہیں ہوتی بلکہ…

مذہبِ شیعت کی ساری فلاسفی ان کی خود ساختہ اور قران مخالف ہے

اگر آپ غور فرمائیں تو آج تک تمام انبیاۓ کرام ایک ہی آل، سے سلسلہ در سلسلہ چلے آۓ ہیں۔یعنی یہ تمام انبیاء اپنی آل سے باہر مبعوث نہیں ہوۓ۔ ایک ہی آل کی لڑی سے منسلک ہیں،اورسب ہی جانتے ہیں کہ، آل کا سلسلہ ہمیشہ اولادِ نرینہ سے ہوتا ہے۔ آپ صلی…

شیعہ وسنی: اتحادکی راہیں

ہم مدتوں سےباہم دست گریباں ہیں اورہم میں سے ہرایک اس بات کاداعی ہےکہ وہ دین خدایعنی اس کی رضاکےلیےسربکف ہے,توجب یہ طےہواکہ اس کی مشیت اپنےآپ میں نہیں ٹکراتی تواب یہ بات لازمی نتیجےکےطورپرطےہےکہ اس ٹکراؤ میں کہیں نہ کہیں ہماری مشیت کی ملاوٹ…

سید مودودی کا اصل کارنامہ اور ان کے مخالفین

سید مودودی کا منہج کسی فرقہ، کسی متعصب گروہ اور کسی متکبر لیڈر کا نام نہیں بلکہ یہ قرآن و سنت سے ٹوٹا ہوا تعلق بحال کرنے، ایمان، عبادت، معیشت، معاشرت اور سیاست کو قرآن و سنت کی روشنی میں استوار کرنے اور مسلمانوں میں افتراق کی بجائے اتحاد و…

مولانا سید ابوالاعلی مودودی کا نظریۂ تعلیم

مولانا مودودی ؒ کی شخصیت ایک متکلم اسلام کی حیثیت سے متعارف ہوئی ہے۔ مغرب کے فکری وسیاسی غلبہ و تسلّط کے نتیجے میں مسلمانوں اور بالخصوص ان کی نوجوان نسل کا ایمان اسلامی عقائد واقدار سے متزلزل ہو رہا تھا۔انھوں نے اپنی طاقت ور اور موثر…